28

دس دنوں کے اندر اندر نشترہال ہمارے حوالے کرے نہیں تو نشترہال پر قبضہ کر لیں گے،ارٹسٹ ایسوسی ایشن کے عہدیداران

ارٹسٹ ایسوسی ایشن کے عہدیداران کی پریس کانفرنس

سینئر فنکار عشرت عباس، احمد سجاد، طارق جمال، جاوید بابر، گلوکار راشد خان، اور وصال خیال نے شرکت کی

پشاور: حکومتیں بدل گئی پر ہمارے مسائل حل نہ ہو سکے،

پشاور: کوروڑوں روپے مختص کی گئی پر کچھ پتہ نہ چل سکا،

پشاور: امصال کلچرل بجٹ کوئی بیالس کروڑ روپے ہے پر مسائل وہی کہ وہی ہے،

پشاور: فنکاروں کو کچھ مہنے تیس ہزار روپے تک دئے گئے وہ بھی بند کر دئے گئے،

پشاور: اینڈونمنٹ فنڈ کا بھی کوئی اتا پتہ نہیں چل سکا،

پشاور: کلچرل ڈیپارٹمنٹ کو ٹورزم میں شامل کیا جارہا ہے کلچرل کا ٹوررزم کے ساتھ کوئی تعلق لی نہیں،

پشاور: فنکاروں کے لیئے کوئی پروگرام شروع نہیں کیا گیا نہ ہی کوئی کام کیا گیا،

پشاور: جنگی ہالات میں فنکاروں نے خدمات سرانجام دئے،

پشاور: کلچرل ڈائریکٹ ختم کیا جارہا ہے،جو ہم کبھی نہیں ہونے دینگے،

پشاور: صوبے کے ثقافت کو فنکار پیش کرتے ہے کلچرل ڈائریکٹریٹ ہوگا تو فنکار ہونگے،

پشاور: کسی بھی صورت میں کلچرل ڈائرکٹ کو ختم ہونے نہیں دینگے،

پشاور: فنڈز کی تقسیم سمیت فنکاروں کے لیئے فلاوبہبود کا کام کلچرل ڈائرکٹریٹ کا ہے،

پشاور: وزیر اعلی اور حکومت سے اپیل ہے کے کلچرل ڈائرکٹریٹ کو کلچرل ڈائرکٹریٹ میں ہے رہنے دے،

پشاور: کلچرل ڈیپارٹمنٹ کو ٹورزم میں شامل کرنے کی باتیں ہو رہی ہے جو ہمیں منظور نہیں،

پشاور: ہمارا سپورٹس اور ٹورزم کے ساتھ کوئی تعلق نہیں ہے ہمارا اپنا ہی ڈیپارٹمنٹ ہے،

پشاور: نشترہال ہمارے کلچرل کا حصہ ہے اور فنکاروں کا اثاثہ ہے اسکو ہمارے حوالے کیا جائے،

پشاور: کلچرل ڈیپارٹمنٹ نے ہمارے ساتھ کوئی اچھا سلوک نہیں کیا لیکن پھر بھی ہمارا ڈیپارٹمنٹ ہے،

پشاور: حکومت سے مطالبہ ہے کے دس دنوں کے اندر اندر نشترہال ہمارے حوالے کرے نہیں تو نشترہال پر قبضہ کر لیں گے،

پشاور: ہمارے فنکار خوش نہیں ہونگے تو ہم بھی خوش نہیں ہونگے،

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں