500

اسلامیہ کالج یونیورسٹی میں طالبات کو ہراساں کرنے کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

اسلامیہ کالج یونیورسٹی کے طلبہ و طالبات نے طالبات کو ہراساں کرنے کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا، مظاہرے میں یونیورسٹی کے طلبہ و طلبات نے شرکت کی اور ہراسمنٹ کے خلاف نعرہ بازی کی،مظاہرین نے یونیورسٹی کے وائس چانسلر کے دفتر کے سامنے یونیورسٹی انتظامیہ کے خلاف شدید نعرہ بازی کی،

طلباء و طلبات نے ہاتھوں میں پلے کارڈز بھی اٹھا رکھے تھے جن پر ہراسگی کے خلاف نعرے درج تھے۔

مظاہرے میں شریک طالبات نے الزام لگایا کہ یونیورسٹی کے اساتذہ پرچوں کی چیکنگ اور ریسرچ پیپرز کے دوران طالبات کو ہراساں کرتے ہیں، مظاہرین کا کہنا تھا کہ یونیورسٹی میں انکو تحفظ نہیں ہے اور انکو تحفظ فراہم کیا جائے،

مظاہرے میں شریک طالبات کا کہنا تھا کہ یونیورسٹی میں انکو ہراساں کرنے کے واقعات میں روز بروز اضافہ ہو رہا ہے لیکن کوئی بھی نوٹس نہیں لیتا، انہوں نے کہا کہ اکثر طالبات اپنی عزت کی خاطر کچھ نہیں کہتی،جسکا فائدہ اساتذہ اٹھا رہے ہیں،

 طالبات نے مطالبہ کیا کہ اعلی سرکاری اہلکار ان واقعات کا نوٹس لے اور کالج میں زیر تعلیم طالبات کو تحفظ فراہم کیا جائے، یاد رہے کہ اس سے پہلے بھی یہ الزامات سامنے ائے تھے کہ یونیورسٹی کے اساتذہ طالبات کو نمبر دینے پر ہراساں کرتے ہیں،

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں